امریکا اور طالبان قیدیوں کی رہائی پر تیار، میکنزم طے ہو گیا

0
7

 امریکا اور طالبان کے مابین تاریخی امن معاہدے کے تحت قیدیوں کی رہائی کے میکنزم پر اتفاق ہو گیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکا طالبان معاہدے میں شامل قیدیوں کی رہائی سے متعلق شق پر عملدرآمد شروع ہونے کا امکان ہے۔

قیدیوں کی رہائی کے میکنزم پر اتفاق رائے پیدا ہونے کے بعد طالبان کی رہائی کے حوالے سے حکم نامہ آج جاری ہو سکتا ہے۔

معاہدےکےمطابق 10 مارچ کو طالبان قیدیوں کی رہائی ہونی ہے، 5 ہزار قیدیوں کو رہائی دی جائے گی جب کہ طالبان بھی ایک ہزار قیدی رہا کریں گے۔

غیر ملکی میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ قیدیوں کی رہائی کےبعد معاہدے کی دوسری شق پر عمل ہو گا جس کے تحت امریکی فوجیوں کی واپسی کل سےشروع ہونے کا امکان ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ ماہ 29 فروری کو افغان طالبان اور امریکا کے درمیان تاریخ ساز امن معاہدے پر دستخط ہوئے تھے، افغان طالبان کی جانب سے ملاعبدالغنی برادر اور امریکا کی جانب سے نمائندہ خصوصی زلمے خلیل زاد نے دستخط کیے تھے۔

سات مارچ کو افغان صدر اشرف غنی نے کہا تھا کہ افغان حکومت کو 5 ہزار طالبان جنگجوؤں کو مزید قید رکھنے کا فائدہ نہیں ہے ،طالبان قیدیوں کی رہائی کا شفاف طریقہ کار مرتب کرنا ہوگا، ضمانت دینی ہوگی رہا کیے گئے طالبان قیدی دوبارہ حملے نہیں کریں گے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here