پنجاب کی 12 بڑی سرکاری جامعات اینٹی کرپشن کے ریڈار پر آگئی

 اینٹی کرپشن پنجاب کی تحقیقاتی ٹیم نے صوبے کی 12 بڑی سرکاری جامعات میں 6 ارب 61 کروڑ کا اسکینڈل بے نقاب کر دیا اور کہا وی سیز نے اختیارات کا ناجائزاستعمال کرکے سرکاری خزانے کو اربوں کا نقصان پہنچایا۔

پنجاب کی 12 بڑی سرکاری جامعات اینٹی کرپشن کے ریڈار پر آگئی ، اینٹی کرپشن پنجاب کی تحقیقاتی ٹیم نے 6 ارب 61 کروڑ کا اسکینڈل بے نقاب کر دیا۔

اینٹی کرپشن حکام کا کہنا ہے کہ وی سیز کے اختیارات کے ناجائز استعمال سے سرکاری خزانے کو اربوں کا نقصان ہوا، گزشتہ 10 سال میں 4554 غیر قانونی بھرتیاں کی گئیں۔

ڈی جی اینٹی کرپشن نے اسکینڈل کی تحقیقات کے لئے 4 رکنی جےآئی ٹی بنائی تھی، جے آئی ٹی نے کرپشن کی رپورٹ ڈی جی اینٹی کرپشن پنجاب کوپیش کر دی۔

ڈی جی اینٹی کرپشن نے گورنر اور چانسلر کو ملوث وی سیز کے خلاف کارروائی کیلئے مراسلہ ارسال کر دیا ہے ، جس میں حکام نے کہا ہے کہ پنجاب کی 12 بڑی جامعات میں پالیسی نظر انداز کر کے بھرتیاں کی گئیں۔

جےآئی ٹی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ گریڈ 1 سے 16 تک 3138، گریڈ 17 اور اس سے اوپر نشستوں پر 1416 غیرقانونی بھرتیاں کی گئیں، سرگودھا یونیورسٹی 1099 غیرقانونی بھرتیوں کے ساتھ سرفہرست رہی۔

رپورٹ کے مطابق پنجاب یونیورسٹی میں 689 غیر قانونی بھرتیاں ہوئیں جبکہ بہاالدین زکریا یونیورسٹی میں 789 غیرقانونی بھرتیاں کی گئیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here