آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا ہے کہ پاکستان افغان امن عمل میں سنجیدہ اور پُرعزم ہے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے امریکی ناظم الامور نے ملاقات کی جس میں باہمی دلچسپی، افغانستان کی صورت حال اور باہمی تعلقات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

آرمی چیف نے کہا کہ پاکستان امریکا کے ساتھ کثیر النوعیت دوررس تعلقات کا خواہاں ہے، پاکستان افغانستان کے پرامن حل کے لیے فریقین سے تعاون کرتا رہے گا۔

امریکی ناظم الامور نے امن و استحکام کے لیے پاکستان کے تعاون کو سراہتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک میں تعلقات کو مزید فروغ دینے کے خواہاں ہیں۔

گزشتہ روز آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ افغانستان میں جاری کشیدگی میں پاکستان کاکوئی پسندیدہ نہیں، ہم افغانستان میں دیرپا امن واستحکام میں مدد کے خواہاں ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ افغانستان میں امن کا مطلب پاکستان میں امن ہے، ہم افغانستان میں دیرپا امن واستحکام میں مدد کے خواہاں ہیں۔

آرمی چیف کا کہنا تھا کہ پاکستان یورپی یونین ممالک سےتعلقات کوخصوصی اہمیت دیتا ہے اور مختلف شعبوں میں مشترکہ مفادات کی بنیاد پرتعاون کے فروغ کے خواہاں ہیں۔

افغانستان میں صورتحال مزید خراب ہوتی ہے تو پاکستان زیادہ متاثر ہوگا، شاہ محمود قریشی

پاکستان افغان
افغانستان میں صورتحال مزید خراب ہوتی ہے تو پاکستان زیادہ متاثر ہوگا، شاہ محمود قریشی

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ افغانستان میں صورتحال مزید خراب ہوتی ہے تو پاکستان زیادہ متاثر ہو گا تاہم پاکستان، افغانستان میں امن کیلئے مصالحانہ کاوشیں جاری رکھنے کیلئے پر عزم ہے۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی زیر صدارت مشاورتی کونسل برائےامورخارجہ کااجلاس ہوا، اجلاس میں افغانستان کی تیزی سے بگڑتی ہوئی صورتحال سمیت اہم سفارتی امور پر مشاورت کی گئی۔

اجلاس میں پاکستان میں کورونا کی موجودہ صورتحال، معاشی مضمرات ،اقدامات سمیت مقبوضہ کشمیر کی صورتحال ودیگر سفارتی امور پربھی تبادلہ خیال کیا گیا۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اسمارٹ لاک ڈاؤن سمیت مؤثر حکمت عملی سےکورونا کے پھیلاؤ میں کمی آئی، کورونا کے معاشی مضمرات سے نمٹنے کیلئے کاوشیں بروئے کار لا رہے ہیں۔

وزیر خارجہ نے داسوواقعےکی تحقیقات میں اب تک کی پیشرفت اراکین کونسل کو آگاہ کرتے ہوئے کہا دہشت گرد کارروائیوں میں افغان سر زمین کا استعمال ہونا افسوسناک ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ خطےمیں تعمیرو ترقی ،روابط کے فروغ کیلئے امن کو ناگزیر ہے، افغانستان میں صورتحال مزید خراب ہوتی ہے تو پاکستان زیادہ متاثر ہو گا تاہم پاکستان، افغانستان میں امن کیلئےمصالحانہ کاوشیں جاری رکھنے کیلئے پر عزم ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here