پاکستان میں بھارتی ‘ڈیلٹا وائرس’ کے کیسز رپورٹ، حکومت نئی پابندیاں عائد کرنے کیلئے تیار

 پاکستان میں ڈیلٹا وائرس کے کیسز سامنے آنے لگے، جس کے پیش نظر حکومت نے نئی پابندیاں عائد کرنے کی تیاری کرلی اور کہا ہے کہ یکم اگست سے ویکسینیشن سرٹیفکٹ کے بغیر ہوائی سفر کرنے پر پابندی عائد ہوگی۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کی جانب سے بیان میں کہا گیا ہے کہ ڈیلٹا وائرس جو درحقیقت انڈین وائرس ہے، انتہائی خطرناک قرار دیا جارہا ہے ، پاکستان میں ڈیلٹا وائرس کے کیسز سامنے آنے لگے جو کورونا کی چوتھی لہر بھی ہو سکتی ہے۔

این سی او سی نے ڈیلٹا وائرس اور پاکستان میں موجود دیگر وائرس کے حوالے سے جامع حکمت عملی ترتیب دے دی ، اگر ڈیلٹا وائرس پہ قابو پانے کے لئے احتیاطی تدابیر اختیار نہ کی گئیں تو خطرناک نتائج کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

اس وائرس کی وجہ سے ہندوستان نے نہ صرف لاکھوں اموات کا سامنا کیا بلکہ اسپتالوں میں آکسیجن کی کمی کے باعث عوام بے یار و مددگار اذیتیں جھیلتے رہے۔

پاکستانی عوام کو اس وائرس کے مضر اثرات سے بچانے کے لئیے این سی او سی کے خصوصی اقدامات جاری ہے ، ان اقدامات میں متعلقہ ایس او پیز پر عمل درآمد اور ویکسین لگوانے کی رفتار کو تیز کرنے پر زور دیا گیا ہے۔

این سی او سی کے مطابق اس ضمن میں موجودہ ایس او پیز کا شدت سے نفاذ 9 سے 18 جولائی تک یقینی بنایا جائے گا ، عید الالضحی کے موقع پہ وبا کے پھیلاؤ کی صورت میں غیر ضروری نقل و حرکت کو محدود رکھنے کیے لئے مختلف تجاویز زیر غور ہیں ، جن پہ عمل درآمد کا فیصلہ کورونا کے پھیلاؤ کو مدنظر رکھ کر آئندہ چند دن میں کیا جائے گا۔

بڑھتی ہوئی وبا کے پیش نظر سیر و سیاحت پہ پابندی کا بھی امکان ہے جبکہ ایک بار پھر اس امر کو یقینی بنانے کے لئے ہدایات جاری کی جا رہی ہیں کہ تمام پرائیویٹ سیکٹر ملازمین ، بشمول کارپوریٹ سیکٹر ، چھوٹی درمیانی اور بڑی انڈسٹری کے ملازمین زراعت، میڈیا ، وکلاء پرائیویٹ کمپنیاں فیکٹری مزدور ، مارکیٹ میں کام کرنے والے ملازمین ، ٹرانسپورٹ سیکٹر سے منسلک افراد ہوٹل ورکز ، ریڑھی بان جمنیزیم ملازمین ، مساجد کے خدام اور آئماء ، شادی ھال ، ورکشاپس پہ کام کرنے والے افراد کو لازماً 31 جولائی سے قبل ویکسین لگوائی جائے۔

این سی او سی نے 18 سال سے زائد عمر کے طلباء اور طالبات کے لئے 31 اگست تک ویکسن لگوانا لازمی قرار دی ہے جبکہ یکم اگست سے ویکسینیشن سرٹیفکٹ کے بغیر ہوائی سفر کرنے پر پابندی عائد ہوگی۔

پاکستان کے تمام سیاحتی مقامات پر جانے والے 30 سال یا اس سے زائد عمر کے افراد پر بغیر ویکسینیشن سرٹیفیکٹ کے سفر اور ہوٹل بکنگ پر عائد پابندی کو یقینی بنانے کے لئیے احکامات جاری کردیے گئے ہیں۔

یکم اگست سے اس پابندی کا اطلاق 18 سے 30 سال تک کے افراد پر بھی ہو گا ، اس ضمن میں تمام متعلقہ اداروں کو ہدایات جاری کر دی گئی ہے۔

پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹر قیصرسجاد نے پاکستان میں بھارتی ڈیلٹاوائرس پھیلنے کا خدشہ ظاہر کرتے ہوئے بازاروں، مویشی منڈیوں اور شادی ہالز کو بند کرنے کا مطالبہ کردیا۔

پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کےسیکریٹری جنرل ڈاکٹر قیصرسجاد نے کہا ہے کہ پاکستان میں بھارتی ڈیلٹا وائرس پھیلنے کاخدشہ ہے ، ملک میں کوروناایس اوپیز کی دھجیاں بکھیری جارہی ہیں۔

ڈاکٹر قیصرسجاد کا کہنا تھا کہ گزشتہ ایک ہفتے سے کوروناوائرس کی شرح پھر بڑھ گئی، بھارتی ڈیلٹاوائرس تیزی سے پھیلتا ہے اور علامات ظاہر ہونے تک بہت دیر ہوجاتی ہے۔

پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کےسیکریٹری نے مطالبہ کیا کہ ایس اوپیزپرعملدرآمد نہ کرنے والے بازاروں،مویشی منڈیوں، شادی ہالز کو بند کیا جائے، حکومت کی ذمہ داری ہے کہ لوگوں کی جان ومال کی حفاظت کرے، ویکسینیشن کروائیں اوروائرس سےمحفوظ رہیں۔

خیال رہے ملک میں کوروناکیسز میں اضافہ ہورہا ہے ، چوبیس گھنٹےمیں مثبت کیسزکی شرح تین اعشاریہ سات نوہوگئی ، این سی اوسی کے مطابق گزشتہ چوبیس گھنٹےمیں پینتیس افرادانتقال کرگئے، جس کے بعد اموات کی مجموعی تعداد بائیس ہزارپانچ سوپچپن ہو گئی، اس دوران اڑتالیس ہزارایک سو چونتیس ٹیسٹ کیے گئے، جن میں ایک ہزارآٹھ سو اٹھائیس مثبت نکلے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here