اگر جہاد کرنا ہے تو برما روہنگیا کی مدد کریں

0
843

اگر جہاد کرنا ہے تو برما روہنگیا کی مدد کریں۔ اگر آج کہیں جہاد فرض ہے تو برما میانمار میں ہے مگر انکے لیئے کوئی آواز نہیں اٹھائے گا.اُن غریبوں کو کوئی سر چھپانے کی جگہ نہیں دے رہا آواز کون اُٹھائے گا۔ اے کاش میرے پاس زمیں ہوتی اور میں اُن سب کو کہتا کہ آ جاؤ اور یہیں بس جاؤ۔ آج کا انسان اتنا تنگ دل ہو گیا ہے کہ انسانیت ختم هو گئی ۔
میں اُن کے ساتھ ہونے والے مظالم کی ویڈیوز لگاؤں گا تو سب کے کلیجے پھٹ کے منہ کو آ جائیں گے۔ کہ کیسے عورتوں کو ننگا کر کہ درختوں کے ساتھ باندھا جاتا ہے اور چیرا پھاڑا جاتا ہے۔ کیسے بچوں کے اعضاء چیرے پھاڑے جاتے ہیں۔ کیسے نوجوانوں کو زندہ دفن کیا جاتا ہے، میری روح میرا وجود کانپ رہا ہے یہ الفاظ لکھتے ہوئے، میں تین سے چار سیکنڈ سے ذیادہ کوئی ویڈیو نہیں دیکھ سکا۔ نا ہی کوئی درد رکھنے والا انسان دیکھ سکتا ہے اُن کو۔.
یا رب العالمین اے رب العزت مسلمانوں کی مدد فرما آمین 

If Burma wants to help Burma Rohingya. If today is jihad, then Burma is in Myanmar but will not raise any voice for them. Who will raise the voice of the poor to no place? I wish I had a land and I would say to all of them, come and just go there. Today’s man has become so tense that humanity has ended.
If I take videos of the tragedy with them, all the keys will come to the mouth of the burst. How to uncover women and tie with trees and the chest is torn. How are the kidneys tied to the chest. How young people are buried alive, my soul is trembling with me. While writing these words, I could not see any of the videos for three to four seconds. Neither a painful person can see them ..
Or the Lord of the Worlds, help the Gracious Muslims. Amin

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here