وفاقی دارلحکومت میں منشیات کے خلاف گرینڈ آپریشن شروع ہو گیا، اسلام آباد پولیس ہیڈکوارٹر میں ڈائریکٹوریٹ میڈیا بھی قائم کر دیا گیا۔

آج اسلام آباد میں ایک پریس کانفرنس میں ایس ایس پی ڈاکٹر مصطفیٰ تنویر نے بتایا کہ وفاقی پولیس میں ڈائریکٹوریٹ میڈیا قائم کر دیا گیا ہے، جہاں ہفتہ وار بریفنگ دی جائے گی اور کرائمز کے حوالے سے میڈیا کو آگاہ کیا جائے گا۔

ایس ایس پی آپریشن ڈاکٹر مصطفیٰ تنویر کو میڈیا ڈائریکٹوریٹ کا ڈائریکٹر بنایا گیا ہے، انھوں نے بتایا کہ وفاقی دارلحکومت میں منشیات کے خلاف گرینڈ آپریشن شروع کر دیا گیا ہے، جس کے دوران 123 منشیات فروشوں کو گرفتار کر لیا گیا۔

وفاقی پولیس کے مطابق منشیات فروشوں کے خلاف آپریشن گزشتہ 5 دن سے جاری ہے، جس میں یہ ساری گرفتاریاں ہوئی ہیں، کارروائیوں کے دوران 27 کلو گرام ہیروئن، پونے 3 کلو آئس، اور ایک من چرس برآمد کی گئی۔ویڈیو پلیئر

ایس ایس پی آپریشن ڈاکٹر مصطفیٰ نے بتایا کہ وفاقی پولیس میں اینٹی نار کوٹکس اسکواڈ بھی قائم کیا جا رہا ہے، منشیات فروخت کرنے میں بچوں اور خواتین کے استعمال کا انکشاف ہوا ہے، جو گرفتاریاں ہوئی ہیں ان میں خواتین بھی شامل ہیں، بچوں کے ذریعے بھی منشیات فروخت کروائی جاتی ہے۔

انھوں نے کہا کہ اب سابقہ ریکارڈ یافتہ ملزمان کی جائیدادیں بھی ضبط کرائی جائیں گی، جب کہ منشیات کے کیسز میں پکڑے گئے غیر ملکیوں کو واپس بھجوانے کے لیے بھی اقدامات کیے جا رہے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here