یہی امت مسلمہ کے آخری سپاہی ہیں جو آج بھی کفار کی نیندیں حرام کئیے ہوے ہیں

0
786

ماہِ رمضان المبارک کی پہلی شہادت

جناب کرنل سہیل عابد کل رات بلوچستان میں آپریشن ردالفساد کے دوران جامِ شہادت نوش فرما گئے

لگانے آئے تھے جو آگ آشیانے کو
وہ شعلے اپنے لہو سے بجھا دیے تم نے
بچا لیا ہے یتیمی سے کتنے پھولوں کو
سہاگ کتنے رکھ لیے تم نے
تمہیں چمن کی ہوائیں سلام کہتی ہیں

اے اہلِ وطن اسی طرح افوج پاکستان کی بے مثال اور لا تعداد قربانیوں کی وجہ ہے جو آج تم اپنے اہل وعیال کے ساتھ پر سکون زندگی گزارہے ہو۔

اگر دشمن اپنی نا پاک حرکتوں سے ہماری فوج اور دفاعی و عسکری اداروں کو کمزور کرنے میں کامیاب ہوگیا تو تمہاری سر زمین پاکستان کو بھی شام، عراق، فلسطین و لیبیا کی طرح کھنڈرات بنا دیا جائے گا۔

تمہاری عورتوں کی عزتیں محفوظ نا رہیں گی
تمہارے بچے یتیمی و بے بسی میں مارے جائیں گے
تمہارا خون ناحق بہا دیا جائے گا
تمہارے ان پر سکون گھروں پر سے بارودی شعلے اٹھیں گے
تمہارے گھروں سکولوں اور ہسپتالوں پر بمب گریں گے

یہی امت مسلمہ کے آخری سپاہی ہیں جو آج بھی کفار کی نیندیں حرام کئیے ہوے ہیں

ایک ساتھ کئی ممالک کی خفیہ ایجنسیوں اور فتنہ پرستوں کی سرکشیوں کا نا صرف مقابلہ کر رہے ہیں بلکہ انکے ناپاک عزائم کو مٹی میں ملا رہے ہیں

دشمن کو پتہ ہے کہ ہم نے پہلے بھی امت مسلمہ کی حفاظت کی اور ہم ہی آئیندہ بھی کریں گے ان شاءاللہ عزوجل

اس لیے دشمن تمہیں اور تمہارے ملک اور افواج پاکستان کو کمزور کرنا چاہتا ہے وہ جان چکا ہے کہ اب اس کے سوا کوئی چارہ نہیں کہ تمہاری صفوں میں غدار پیدا کر دئیے جائیں
نئی صوبائی لاسانی و مذہبی تفریق پیدا کی جائے۔

تمہیں قومیت و حقوق کا سبق پڑھا کر فرقہ فرقہ ریزا ریزا کر کے الگ کر دیا جائے۔

اس لیے آج افواج پاکستان کو سب سے ذیادہ پروپیگنڈوں کا سامنا ہے

کبھی پختون تحفظ موومنٹ کا سانپ دسنے کو آتا ہے

تو کبھی نواز شریف اور اسکے حامی دشمنوں کی ترجمانی کر کے افواج اور پاکستان کے موقف کو عالمی سطح پر کمزور کرنے کے ہتھ کنڈے استعمال کرتے ہیں

تو کبھی جنرل جوزف کا سارے کا سارا معاملہ فوج کے کھاتے ڈال کر ڈس انفارمیشن پروپیگنڈہ کیا جاتا ہے تاکہ افواج پاکستان کی قومی سطح پر بدنامی کرنے کے ساتھ ساتھ عوام کے دلوں میں نفرت بھی پیدا کی جائے۔

پھر اسی نفرت و بغض کا فائدہ اٹھاتے ہوئے تمہیں بغاوت کرنے پر مجبور کر دیا جائے۔۔ اور بلآخر گھر کو گھر ہی کے شراغ سے آگ لگا کر تمہارا حال بھی عراق و شام جیسا کر دیا جائے۔

یاد رہے کے امت مسلمہ کے کئی ممالک کفار نے صرف پراکسی وار سے تباہ وبرباد کر کے ان کے قیمتی وسائل پر قبضہ کرلیا ہے۔ ان ممالک نے بھی اپنی فوج اپنے محافظوں کو غلط سمجھا تھا تو کیا ہم بھی انہیں کے نقشِ قدم پر چل رہے ہیں؟

بتاتا چلوں اس وقت دشمن عناصر ففط جنریشن پروپیگنڈا وار پر بہت ذیادہ کام کر رہے ہیں جس میں الیکٹرانک اور سوشل میڈیا استعمال کرتے ہوئے بے بنیاد چھوٹے اور منگڑت الزامات کے ساتھ پاکستان اور اسکے دفاعی عداروں کو نا صرف نظریاتی طور پر کمزور کیا جا رہا ہے بلکہ انکے خلاف نفرت پیدا بھی کی جا رہی ہے۔

ففط جنریشن وار ہمیشہ قومیں لڑتی ہیں فوجیں نہیں سوشل میڈیا استعمال کرنے والوں کا اب یہ فرض بنتا ہے کہ دشمن کو اس محاز پر پر بھی شسکت دیں۔ اسے ہر پروپیگنڈے کا منہ توڑ جواب دیتے ہوئے اپنے آشیانے کی حفاظت از خود کریں اپنی صفوں میں موجود غدارِ قوم و ملت کو بے نقاب کریں۔

جو احباب یہ فرض نبھا رہے ہیں الله عزوجل انکی حفاظت فرمائے اور انکے کام اور صحت و رزق میں اس مقدس ماہ رمضان کے صدقے ڈھیروں برکتیں عطا فرمائے۔

تحریر محمد شاہد عنائیت

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here