کیا نواز شریف ایک طاقتور ملک کے وزیر اعظم نہیں ہیں ؟؟؟

0
363

کیا نواز شریف امریکہ سے مسجد کے لیے چندہ مانگنے گیا تھا یا چند انتہائی سنجیدہ معاملات پر اوباما سے بات کرنے گیا تھا؟؟؟؟

یہ کونسا انداز تھا کہ نہایت رسمی سے انداز میں اوباما نے نواز شریف کو چند منٹ دئیے ۔ جس میں نواز شریف نے ایک کاغذ سے جھجکتے اور لجلجاتے ہوئے املا پڑھ کر سنایا ۔ اس چند منٹ کی املا میں دو بار پانی پیا اور دو غلطایں کیں ۔ مسز اوباما کو مسٹر اوباما کہا ۔ ڈرون کی نہایت سرسری انداز میں بات کی جس کا اوباما نے جواب تک نہیں دیا!!!

یہ انداز تو مسجد کے لیے چندہ مانگنے والوں کا ہوتا ہے اور ان سے یہی رویہ رکھا جاتا ہے جو میٹنگ کے دوران اوباما کا نواز شریف کے ساتھ تھا۔۔۔!!

کیا نواز شریف ایک طاقتور ملک کے وزیر اعظم نہیں ہیں ؟؟؟
کیا اوباما سے چند منٹ لے کر محض اس کو املا سنا دینا ہی کارنامہ ہے؟؟
کیا دو سربراہان مملکت کے درمیان معاملات ایسے ڈسکس کیے جاتے ہیں؟؟

اسکی خاموشی کو نیم رضامندی سجھنا ایسے تو شائد نکاح میں ہوتا ہے !!!

اوباما کی ڈرون حملوں والی بات کو یکسر نظر انداز کر دینے پر انہوں نے شادیانے بجائے ۔۔۔ اب اس کا خمیازہ بھگتیں۔۔۔۔۔

ہمارے لیڈروں کو یہ تک نہیں پتہ کہ لیڈر یا سربراہ ہوتا کیا ہے ۔۔۔افسوس صد افسوس!!

تحریر شاہد خان

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here