کوئٹہ میں یکے بعد دیگرے دو دھماکے، رپورٹر سمیت 13 افراد زخمی

0
148
کوئٹہ کے علاقے خیزی چوک میں ہونے والے دھماکوں سے رپورٹر اور کیمرہ مین سمیت 13 افراد زخمی۔ سیکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر تحقیقات شروع کردیں۔ زخمیوں میں ایس ایچ او سمیت 7 پولیس اہلکار بھی شامل ہیں.
دھماکوں کی اطلاع ملتے ہی قانون نافذ کرنے والے اداروں کے اہلکار اور ریسکیو کی ٹیمیں فوری طور پر موقع پر پہنچیں۔ امدادی ٹیموں نے ایمبیولینسوں کے ذریعے زخمیوں کو ہسپتال منتقل کیا جہاں انھیں طبی امداد دی جا رہی۔
اطلاعات ہیں کہ کوئٹہ کے علاقے خیزی چوک میں پہلے گیس سلنڈر کا دھماکا ہوا۔ دھماکے کی کوریج کیلئے نیوز کی ٹیم پہنچی تو دوسرا دھماکا ہو گیا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ دوسرا دھماکا موٹر سائیکل میں نصب بارودی مواد سے کیا گیا۔
دھماکے سے نیوز کے نمائندہ ابرار احمد اور کیمرہ مین رحمت علی شدید زخمی ہو گئے جن کی حالت تشویشناک بتائی جا رہی ہے۔ ابرار احمد کو ٹراما سنٹر سول ہسپتال جبکہ رحمت علی کو بی ایم سی منتقل کر دیا گیا ہے۔ ابرار احمد کا سول ہسپتال ٹراما سینٹر میں آپریشن جاری ہے۔ ان کی دونوں ٹانگیں فریکچر ہو گئی ہیں۔
اطلاعات ہیں کہ دس سے پندرہ منٹ بعد دوسرا دھماکا ہوا۔ ادھر سیکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر تحقیقات شروع کر دی ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here