پشتونوں کا بیوپاری افغان

0
441

پشتونوں کا بیوپاری افغان

اس شخص کا نام نصیب ناصر ہے۔ یہ افغانی ہے اور آج کل ژوب میں رہائش پزیر ہے

اس سے پہلے یہ کراچی میں رحمان ڈکیت کا دست راست تھا اور اس کی خونریزی میں برابر کا شریک۔
رحمان ڈکیت کے مرنے کے بعد اس نے ایم کیو ایم جوائن کر لی۔ یہ نائن زیرو میں ایم کیو ایم کا بڑا عہدیدار مانا جاتا تھا اور ان کا بہت بڑا بھتہ خور اور ٹارگٹ کلر تھا۔

یہ ایم کیو ایم کو کراچی کے مالدار اور صاحب حثیت پشتونوں کی لسٹیں اور نام پتے بھی فراہم کرتا تھا۔

جب ایم کیو ایم کمزور ہوئی تو یہ واپس ژوب آیا اور ژوب سے کچھ فاصلے پر اینٹوں کا بھٹہ بنوا لیا۔
بلدیاتی الیکشن دو ہزار تیرہ میں اچکزئی گروپ سے کونسلر منتخب ہوا۔

اس کے کچھ دن بعد اس نے داڑھی بھی رکھ لی

آج کل یہ پی ٹی ایم کا ژوب میں کوآرڈینیٹر ہے اور ریاست پاکستان کے خلاف مسلسل متحرک ہے۔
پی ٹی ایم کی ساری قیادت یہ بات بخوبی جانتی ہے اور غالباً اس کی بدمعاشی کے پیش نظر ہی اس کو کوارڈینیٹر بنایا ہے۔

یہ پشتونوں کا بہت بڑا قاتل اور دشمن ہے۔
یہ ہے اس سفید ریش فتنے کی حقیقت۔

کل سے پوری یہ خود پی ٹی ایم کے ساتھ ملکر پراپیگینڈا کر رہا ہے کہ کامران نامی پولیس والے نے مجھے گالی دی ہے

اس بدبخت اور ظالم انسان کی تشریف پر چتھر مارنے چاہئیں گالی تو بہت معمولی چیز ہے۔

اب اس ایٹمی ریاست کو چینلج ہے کہ پشتونوں کے قاتل اس افغانی پر ہاتھ ڈال کر دکھائیں۔

نوٹ ۔۔ کامران کو میرا سلام پہنچا دیں اور یہ پوسٹ پی ٹی ایم والوں کے منہ پر ماریں جو اس بدبخت کے حق میں مہم چلا رہے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here