پاکستان نے طیارے ڈیکوریشن پیس کے طور پر نہیں خریدے

0
46

پاکستان اپنے دفاع کے لئے ایف 16 طیارے استعمال کر سکتا ہے۔سفارتی زرائع
پاکستان نے طیارے ڈیکوریشن پیس کے طور پر نہیں خریدے۔سفارتی زرائع

پاکستان نے سفارتی سطح پر بھارت کا ایک اور جھوٹ بے نقاب کر دیا ہے۔ بھارت کو حالیہ کشیدگی میں بھارتی فضائیہ کو بھاری جانی اور مالی نقصان اٹھانا پڑا۔ پاکستان فضائیہ نے 6 جگہوں کو لاک کر کے ہٹ کیا تو بھارت کی چینخیں نکل گئی اور بھارت نے پروپیگنڈا کرنا شروع کر دیا کہ پاکستان نے اس اٹیک میں امریکن ایف 16 طیاروں کو استعمال کیا ہے۔

ترجمان پاک فوج نے اپنی پریس بریفنگ میں صاف بتا دیا کہ یہ جے ایف تھنڈر طیارہ استعمال ہوا۔
پاکستان کے اس مایہ ناز جنگی شہکار جے ایف تھنڈر 17 کی بھرپور صلاحیت سے اگلے ہی دن اس کی ویلیو شئیر میں اضافہ ہو گیا۔

بھارت نے اس امید کے ساتھ پروپیگنڈا کیا کہ امریکہ پاکستان پر دباؤ بڑھاۓ گا اور پاکستان کو معاشی پابندیوں کی دھمکی دے کر دباؤ میں لے آئے گا۔ اس سے پہلے امریکہ نے ہمشہ بھارت کی لابنگ کو ہی پاکستان پر استعمال کیا اور ہمیشہ بھارت کے کہنے پر پاکستان کو دباؤ میں لایا۔

جب پاکستان پہلے امریکہ سے کوئی چیز خریدتا امریکہ پاکستان کی مجبوری کا فائدہ اٹھا کر اس کے ہاتھ پاؤں پہلے ہی باندھ دیتا اور کڑی شرائط کے ساتھ پاکستان کے ساتھ کوئی بھی دفاعی معاہدہ کرتا۔ امریکہ کوئی بھی اس شرط پر دفاعی سازو سامان دیتا کہ اس کا ریپیرنگ سامان( پرزے) صرف امریکہ ہی دے گا۔

پاکستان نے امریکہ سے ہی ایف سولہ طیارے خریدے تھے۔ آج پاکستان ⁦🇵🇰⁩ پہلے سے مظبوط ہے اور اپنا دفاعی سامان زیادہ خود ہی بنا ریا ہے۔ الحمداللہ

امریکہ نے اس بار سفارتی سطح پر اس معاملے میں کوئی رابطہ نہیں کیا اور یوں بھارت کو ایک بار پھر منہ کی کھانی پڑی
بھارت کو یہ واضح کر دینا چاہتا ہوں کہ اب تجھے امریکہ بھی نہیں بچا سکتا کیونکہ اس سپر پاور کو پاکستان نے زیرو بنا دیا ہے۔

اگر کوئی امریکہ کو مسئلہ ہو پاکستان نبض چیک کر کے فوری مدد کرتا ہے اور اب امریکہ تیری باتوں میں کبھی نہیں آئے گا۔امریکی جنرل جوزف بتا چکا کہ پاکستان نے جتنا پچھلے 6 ماہ میں تعاون کیا اتنا 18 سال میں نہیں کیا۔😆

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here