پاکستان مخالف قوتیں تیزی سے پاکستان میں اپنے اہداف حاصل کرنا چاہتی ہیں جس کے ان کی عالمی رابطہ کاری میں تیزی آ چکی ہے

0
2403

پاکستان مخالف قوتیں تیزی سے پاکستان میں اپنے اہداف حاصل کرنا چاہتی ہیں جس کے ان کی عالمی رابطہ کاری میں تیزی آ چکی ہے اس سلسلے میں
ایک خفیہ میٹنگ بھارت، ایک افغانستان اور ایک یورپی ملک میں ہوئی جس کی میزبانی اسرائیل کی خفیہ ایجنسی موساد نے کی
 ان تینوں اجلاسوں میں غیر ملکی ایجنسیوں کے اہم افراد اور پاکستان میں ان کے آلہ کار شامل تھے ۔ حساس اداروں نے نہ صرف اس خفیہ اور خوفناک سازش کے حوالے سے ثبوت حاصل کر لئے بلکہ گفتگو کی ریکارڈنگ بھی حاصل کر لی ہے.

ان میٹنگز کے بعد
منظور پشتین، محمود اچکزئی، براہمداغ بگٹی، حیربیار مری اور پاکستان سے بھاگ جانے والی کا لعدم تنظیموں کے رہنمائوں کے رابطوں میں تیزی آئ ہے ۔ عید کے بعد قومی اداروں اور پاکستان کیخلاف غیر ملکی خفیہ ایجنسیوں کی مدد اور فنڈنگ سے خوفناک کھیل کھیلنے کا پلان بنایا گیا ہے اس خوفناک پلان میں سندھ کی ایک بڑی اور ملک کی ایک معروف بڑی سیاسی جماعت بھی ان کو در پردہ سپورٹ کرے گی

منظور پشتین اور اس کے ساتھیوں کو ٹارگٹ دیا گیا ہے کہ وہ عید کے بعد مختلف شہروں میں تعلیمی اداروں کے اندر اور شہروں میں رہنے والے اپنے ساتھیوں کے ذریعے پاکستان مخالف کمپین شروع کریں گے اور اس کیلئے باقاعدہ تیاری کی شروع کر دی گئی ہے اور پانچ بڑی این جی اوز جو منظور پشتین کے جلسوں میں سرکردہ نظر آتی ہیں ان کے ذریعے سے فنڈنگ شروع کر دی گئی ہے

مختلف ممالک سے رابطے بھی شروع کر دئے گئے ہیں۔ عید کے بعد یہ ملک دشمن عناصر دوبارہ جلسوں کا سلسلہ شروع کر کے گڑبڑ پھیلانے کی کوشش کریں گے اور ان کے جلسے جلوسوں میں مختلف سیاسی پارٹیاں اپنے کارکنوں کو بھیج کر یہ تاثر دیں گی کہ ان لوگوں کے ساتھ بہت زیادہ تعداد میں لوگ ہیں اور ان کا نعرہ ٹھیک ہے ۔

اربوں روپے کی یہ فنڈنگ را ،موساد ،این ڈی ایس کے ذریعے کی گئی ہے اور بلوچستان کے ساتھ ساتھ کے پی کے کی ایک سیاسی جماعت بھی در پردہ ان کی سپور ٹ کر رہی ہے ۔

ایم کیو ایم لندن بھی نہ صرف ان کے ساتھ رابطے میں ہے بلکہ اس خفیہ خوفناک کھیل کا حصہ بھی ہے ۔

سابقہ حکومت کی ایک اہم شخصیت کی ہدایت پر کون سے اہم لیگی رہنما منظور پشتین اور ان کے ساتھیوں کے ساتھ رابطے میں ہیں اور اہم اداروں کیخلاف اس خوفناک سازش کا حصہ ہیں، اس حوالے سے بھی اہم ترین ثبوت اداروں کے پاس آ چکے ہیں۔ حساس اداروں نے اس خوفناک سازش سے نمٹنے کیلئے کام شروع کر دیا ہے

حجاب رندھاوا

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here