پاکستان ایک زندہ ضمیر اور عالی ظرف لوگوں کی سرزمین ہے، جسے دشمنی بھی نبھانے کے آداب آتے ہیں۔

0
706

دشمنی کے آداب ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ !

دشمنوں کے معاملے میں جتنا حسنِ سلوک سیرتِ نبوی ؐ سے ملتا ہے کہیں اور اسکی مثال نہیں ملتی۔ الحمد اللہ، ہم پاکستانی دشمنوں سے سلوک کے معاملے میں اپنے نبیﷺ کی روایات پر قائم ہیں۔ 

تمام تر خدشات کے باؤجود پاکستان نے اسلام اور انسانیت کے بنیادی اصولوں کو مد نظر رکھتے ہوئے اپنے بدترین دشمن کلبھوشن کو اسکی بیوی سے ملاقات کرنے کی اجازت دے کر عالی ظرفی کی مثال قائم کی۔ 

بجائے شکر گزار ہونے کے بھارتی میڈیا نے پراپیگینڈا کیا کہ انٹرنیشنل کورٹ آف جسٹس کے دباؤ پر پاکستان نے اس کی اجازت دی۔ کلبھوشن کی اس کی بیوی سے ملاقات کے بارے میں انٹرنیشنل کورٹ آف جسٹس نے نہ تو پاکستان پر دباؤ ڈالا نہ ہی پاکستان ایسا دباؤ لیتا ہے۔ آئی سی جے نے ایسے کوئی احکامات جاری ہی نہیں کیے۔ لیکن بھارتی میڈیا مسلسل اپنی عوام کو بے وقوف بنانے میں مصروف ہے۔

اب اس نے یہ فرمائش بھی ڈال دی ہے کہ کل بھوشن کی ماں سے بھی اسکی ملاقات کرائی جائے۔ پاکستان نے اس پر بھی غور کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ہمارا واسطہ اس دشمن سے ہے جو نیپال سے ہمارا ریٹائرڈ کرنل اغواء کر کے ماننے کو بھی تیار نہیں ہوتا۔ کلبھوشن کی اس کی بیوی سے ملاقات ریاستِ پاکستان کا بھارت پر نہ صرف احسان ہے بلکہ ایک خاموش پیغام بھی کہ “اے کمینے دشمن تم نیپال سے پاک فوج کا ریٹائرڈ کرنل اغوا کر کے مکر گئے، ہم نے اپنی مٹی سے تمہارا حاضر سروس جاسوس گرفتار کیا اور اسے اس کی اہلیہ سے ملوا دیا۔ یہ ہمارا ظرف تھا جو ہم نے دکھایا ،وہ تمہاری اوقات ہے جو تم نے دکھائی”۔

فتح مکہ کے موقع پر غلبہ ہو یا طائف کی گلیوں میں پتھر کھانے کے کرب ناک لمحات، نبی اکرمﷺ نے دونوں موقعوں پر دشمنوں سے حسن سلوک کی انتہا دکھائی۔ ہندو بنیا کیا جانے کہ انسانیت کیا ہے اور احترامِ انسانیت کیا چیز۔

سنا ہے ہمارے کچھ نام نہاد دانشوران کو ہری ہری سوجھ رہی ہیں کہ شاید اب پاکستان کلبھوشن کو قونصلر کی رسائی بھی دے دے گا۔

تو ان سے عرض ہے کہ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔

کلبھوشن کو کونسلر رسائی کبھی نہیں ملے گی ۔۔۔

اور کلبھوشن کے خلاف قانونی کاروائی جاری ہے جس کے اختتام پر انشاء اللہ پاکستانی قوانین کے مطابق قرار واقعی سزا دی جائے گی۔

پاکستان ایک زندہ ضمیر اور عالی ظرف لوگوں کی سرزمین ہے، جسے دشمنی بھی نبھانے کے آداب آتے ہیں۔

تحریر شاہدخان

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here