ٹی ٹی پی نے پاکستان کے 32000 مربع کلامیٹر علاقے پر قبضہ کر کے وہاں سے حکومتی رٹ ختم کر دی تھی۔

0
606

پاک فوج کے آپریشن نہ کرنے پر مسلکی چورن بیچنے والوں کی خدمت میں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ !

( ٹی ٹی پی کو علامتی نام سمجھئے نام تبدیل ہوتے رہے ہیں اور دہشت گرد 2002 سے ایکٹیو ہیں )

ٹی ٹی پی نے پاکستان کے 32000 مربع کلامیٹر علاقے پر قبضہ کر کے وہاں سے حکومتی رٹ ختم کر دی تھی۔

تحریک لبیک نے فیض آباد چوک بند کیا ہے۔

ٹی ٹی پی نے پاکستان میں عسکری اداروں، پولیس اور عام شہریوں پر کم و بیش 14000 حملے کیے جن میں زیادہ تر خودکش اور بم حملے تھے۔

تحریک لبیک نے پولیس پر وہ شیل واپس پھینکے جو پولیس والوں نے مارے تھے۔ یہی کام کچھ عرصہ پہلے پی ٹی آئی کے دھرنے میں بھی ہوا تھا۔

ٹی ٹی پی نے اب تک آٖفیشل ذرائع کے مطابق 35000 اور نان آفیشل ذرائع کے مطابق 67399 پاکستانیوں کو قتل کیا ہے جن میں اکثریت پشتون ہیں۔ کم از کم 2000 لوگوں کے انہوں نے سر کاٹے ہیں۔

تحریک لبیک کے پولیس کے ساتھ تصادم میں غالباً ایک پولیس والا جانبحق ہوا ہے۔

ٹی ٹی پی ایک منظم دہشت گرد تنظیم تھی جسکو افغانستان سے انڈیا اور امریکہ کنٹرول کررہے تھے۔

تحریک لبیک کا دھرنا محض مشتعل پاکستانیوں کا ایک ہجوم تھا۔

ٹی ٹی پی اور دیگر دہشت گرد تنظیموں نے تین جرنیلوں سمیت پاک فوج کے کم و بیش 6855 جوان شہید کیے ہیں۔

تحریک لبیک نے پاک فوج کو دیکھتے ہی پاک فوج زندہ باد کے نعرے لگائے۔ ایک پتھر تک نہیں پھینکا۔

تحریک لیبک نے ٹی ٹی پی کی طرح سکول میں 135 بچوں کو قتل نہیں کیا،
نہ ہی 100 سے زائد مساجد کو دھماکوں میں اڑایا،
نہ ہی ایم کیو ایم کی طرح ڈھائی سو مزدوروں کو محض بھتے کے لیے زندہ جلایا،
نہ ہی الطاف حسین کی طرح پاکستان کو تباہ کرنے کا اعلان کیا،
نہ ہی بی ایل اے کی طرح پاکستان کو توڑنے کا اعلان کر رکھا ہے،
نہ ہی بی ایل ایف کی طرح لوگوں کو بسوں سے اتار کر شناختی کارڈ دیکھ کر گولی ماررہی ہے۔

اس لیے فرق تو ہے۔ بہت فرق ہے۔

جو لوگ کہتے ہیں کہ پنجابی تھے تب آپریشن نہیں کیا تو عمران خان کےدھرنےمیں تو پشتون تھے نا، اس میں پولیس پر اس سے زیادہ حملے ہوئے تھے لیکن وہاں بھی پاک فوج نے آپریشن نہیں کیا تھا۔

لشکرجھنگوی تو پنجابی ہے نا عبدالعزیز تو پنجابی ہے نا؟ ان کے خلاف پاک فوج نے آپریشنز کیے ہیں۔

پاک فوج نے تو سوات میں فضل اللہ جیسے دہشت گرد کے ساتھ بھی امن معاہدہ کر لیا تھا۔ لیکن جب امن معاہدے کے باؤجود انہوں نے پاک فوج کے دو افسروں کو گرفتار کر کے ان کے سر کاٹ دئیے اور اپنی کاروائیاں جاری رکھنے کا اعلان کیا تب فوج کیا کرتی؟

پاک فوج نے تو بے شمار پاکستانیوں کو قتل کرنے والےبلوچ فراریوں کو بھی ہتھیار ڈالنے پر گلے سے لگایا ہے۔

ن لیگ سیاسی محاذ پر شکست کھانے کے بعد سوشل میڈیا پرپاک فوج کے خلاف زہر اگلنے لگی ہے کہ تحریک لبیک پنجابی تھے اس لیے پاک فوج نے آپریشن نہیں کیا۔ شرم کرو بے شرمو ۔۔۔۔۔ !

تحریر شاہدخان

نوٹ ۔۔۔۔۔۔ معلوماتی مضامین کے لیے پلے سٹور میں جاکر Related Pakistan نامی ایپ انسٹال کیجیے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here