سارہ بی بی فوج اور پی ٹی ایم

0
301

سارہ بی بی فوج اور پی ٹی ایم
Virel Plz..
چپرہ میں مائن بلاسٹ میں زخمی ہونے والی سارہ بی بی کی یہ تصاویر نہ کبھی پی ٹی ایم شیر کرے گی نہ منظور پشتین میں اتنا ظرف ہے۔

سارہ بی بی کے ساتھ کیا ہوا اور پاک فوج اور پی ٹی ایم کیا کرتی رہی ؟؟؟

غالبا ساڑھے چار بجے وہ بلاسٹ میں زخمی ہوئی۔
اس کے خاندان نے ایک پرائیوٹ گاڑی کا بندوبست کیا اور اس کو لے کر سول ہسپتال کی جانب روانہ ہوگئے۔
پاک فوج کو اطلاع ملی تو خارگئی میں موجود خٹک سکاؤٹس نے فوری ایمبولنس کا بندوبست کیا لیکن اس وقت تک اس کا خاندان اس چیک پوسٹ سے گزر چکا تھا۔

پاک فوج نے کسی طرح اس کے خاندان سے فون پر رابطہ کیا اور ان کو ڈی آئی خان کے سی ایم ایچ اسپتال لے جایا گیا۔ وہاں مریضہ کو وصول کرنے کے لیے پہلے سے انتظامات مکمل کر لیے گئے تھے۔
مریضہ کو فوری طور پر انتہائی نگہداشت کے شعبے میں منتقل کیا گیا۔
جس گاڑی میں اس کو لایا گیا اس کا کرایہ تک کپیٹن رضوان نامی فوجی نے دیا۔
پیچھے مریضہ کے گھر پر میجر ذیشان راشن اور سامان لے کر پہنچے اور انہیں تسلی دی کہ ان شاءاللہ وہ بچ جائیگی اس کا بہترین علاج ہورہا ہے۔
اب تک کی اطلاع کے مطابق اس کے جسم کے اہم اعضاء محفوظ ہیں اور کام کر رہے ہیں۔

یہ پاک فوج کر رہی تھی۔

اسی دوران پی ٹی ایم کو ارمان لونی کے ہارٹ اٹیک کے بعد کوئی ایشو ہاتھ آیا۔ منظور پشتین نے فوری طور پر اس کی ایک ایسی تصویر کے ساتھ پوسٹ لگائی جس کو عام شخص دیکھ بھی نہیں سکتا۔
غالباً اس کے عزیزوں کے دکھ میں اضافہ کرنے کے لیے۔
اس کے بعد اپنے ایجنڈے کے مطابق اس حادثے کو لے کر پاک فوج اور ریاست پاکستان کے خلاف مغلظات بکنی شروع کر دیں۔
جب پراپر رسپانس نہیں آیا تو ایک اور پوسٹ لگائی اور اپنے ساتھیوں کو وارننگ دی کہ سب کچھ چھوڑ کر فلحال اس ایشو پر کام کرو۔
” مطلب زیادہ سے زیادہ اس کو کیش کرو”

نہ اس کے گھر گئے
نہ اسپتال
نہ دوائی
نہ علاج
اور نہ ہی خیریت پوچھی
نہ ہی اس کی خیریت بتائی عوام یا اس کے گھر والوں کو۔

میں اس پر قسم کھا سکتا ہوں کہ پی ٹی ایم نے جس طرح اس کیس کو اپنے سیاسی مقصد کے لیے بے رحمی سے استعمال کیا ان کو اس حادثے پر دکھ نہیں خوشی ہوئی ہوگی۔

ان کے یہ کرتوت ان کی شیطانیت اور فسادی ایجنڈے کو پوری طرح بے نقاب کر چکے ہیں۔

یاد رہے کہ یہ وہ مائنز ہیں جو ٹی ٹی پی لگا کر بھاگی ہے جن کو تلاش کرتے کرتے اور صاف کرتے کرتے اب تک پاک فوج کے کئی جوان اپنی جانیں دے چکے ہیں۔

نوٹ ۔۔ اس کو جتنا ہوسکے وائرل کرو اور منظور پشتین کے وال تک پہنچاؤ کہ خدا کے لیے انسان بنو اور پشتونون کے جذبات سے کھیلنا چھوڑ دو۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here