حکیم اللہ محسود پر ڈرون حملہ ۔۔۔۔ امریکہ کا پاکستان کے خلاف باقاعدہ جنگ کا اعلان ہے

0
1004

حکیم اللہ محسود پر ڈرون حملہ ۔۔۔۔ امریکہ کا پاکستان کے خلاف باقاعدہ جنگ کا اعلان ہے ۔۔۔

ثابت ہوا کہ امریکہ پاکستان میں امن کی کسی بھی کوشش کو کامیاب نہیں ہونے دیگا ۔۔ اور ٹی ٹی پی کے جس لیڈر کے دل میں بھی پاکستان کے ساتھ مذاکرات کا خیال جنم لے گا اسکو ڈرون حملے میں مروا دیا جائیگا ۔۔۔۔۔ !!!

یہ بات بھی قابل غور ہے کہ حملہ اجلاس پر نہیں کیا گیا صرف حکیم اللہ محسود کو ہی کیوں نشانہ بنایا گیا ۔۔۔۔۔۔ ؟؟؟؟

یقیناً حکیم اللہ کے متبادل کا بندوبست پہلے ہی کر دیا گیا ہوگا ۔۔۔ جو ممکنہ طور پر شیخ خالد عمر یا مولوی فضل اللہ ہوسکتا ہے ۔۔۔ کیونکہ وہ دونوں کھل کر افغان فورسزز اور انڈینز کے ساتھ رابطوں کا اعلان کرتے ہیں اور پاکستان کے خلاف سخت ترین موقف رکھتے ہیں ۔۔۔۔۔ اجلاس پر حملے سے یقیناً وہ لیڈرز بھی مارے جاتے جن کو اب حکیم اللہ کی جگہ لینی ہے ۔!!

نواز شریف کے دورے کی دوران ہی یہ دوسرا حملہ بھی ہوگیا ہے جو باقاعدہ ان مذاکرات پر ہوا ہے جسکا نواز شریف نے وہاں ڈھنڈورا پیٹا تھا ۔۔۔۔۔۔

امریکہ اس سے صرف دو نتائج حاصل کرنا چاہتا ہے ۔۔۔۔۔۔۔ پہلی کہ پاکستان اور ٹی ٹی پی کے درمیان مذاکرات کے ذریعے امن کی تمام کوششیں ناکام ہوجائیں اور ٹی ٹی پی پاکستان کے خلاف اپنے حملوں میں تیزی لے آئے اور دوسری ان حملوں کے جواب میں حکومت پاکستان شمالی وزیرستان میں آپریشن کا اعلان کر دے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔!!

حکیم اللہ محسود کی ہلاکت کا سب سے بڑا نقصان یہ ہوگا کہ وہ ایک طاقتور لیڈر تھا جس کا اثر تمام گروپوں پر تھا اور اگر وہ پاکستان کی بات مان لیتا تو اسکے ذریعے ٹی ٹی پی کے بقیہ گروپوں کو کنٹرول کرنا آسان تھا ۔۔۔۔۔۔۔ اگلا لیڈر اگر کمزور ہوا تو بیک وقت ان بہت سارے گروپوں سے مذاکرات ممکن نہ ہونگے !!

اگر نواز شریف میں ذرا بھی ہمت ہے تو فوراً پاک فوج کو ڈرون گرانے کا حکم دے دیں اور نیٹو سپلائی اس وقت تک کے لیے روک دیں جب تک امریکہ ڈرون حملہ نہ کرنے کی ضمانت دے دے ۔۔۔۔۔۔۔۔!!

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here