حکومت کا نوازشریف سے متعلق برطانیہ کو خط بھیجنے کا انکشاف

0
73

وفاقی حکومت نے سابق وزیراعظم نوازشریف کے حوالے سے برطانوی حکومت کو خط لکھا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ علاج کے بعد نوازشریف کو پاکستان کے حوالے کیا جانا چاہئے۔

تفصیلات کے مطابق یہ انکشاف نجی نیوز کے پروگرام میں میزبان ارشد لطیف کی جانب سے کیا گیا۔

برطانوی حکومت کو لکھے گئے خط میں نوازشریف کیس کی تفصیلات بھی منسلک ہیں، خط کے متن میں کہا گیا ہے کہ نوازشریف کےخلاف متعدد کیسز چل رہے ہیں اور نوازشریف کو ایک کیس میں سزابھی دی جاچکی ہے۔

خط کے متن کے مطابق علاج کے بعد نوازشریف کو پاکستان کےحوالےکیا جانا چاہئے، مجرم علاج کی غرض سے آیا ہے، واپس ضرور بھیج دیجئے گا۔

یہ بھی پڑھیں: انسانی ہمدردی کی بنیادوں پرنوازشریف کوباہر جانے دیا، عمران خان

یاد رہے اسلام آباد ہائی کورٹ نے العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کی طبی بنیاد پر ضمانت منظور کرتے ہوئے سزا 8 ہفتے کیلئے معطل کر دی تھی۔

بعد ازاں حکومت نے سابق وزیراعظم نوازشریف کے بیرون ملک جانے پر انڈیمنٹی بانڈز کی شرط رکھی تھی ، جس پر لاہور ہائی کورٹ نے حکومت کی جانب سے عائد کردہ انڈیمنٹی بانڈز کی شرط کو مسترد کرتے ہوئے نواز شریف کو غیر مشروط طور پر بیرون ملک جانے کی اجازت دی تھی ، فیصلے میں کہا گیا تھا کہ نوازشریف کو علاج کےغرض سے 4 ہفتوں کے لیے باہر جانے کی اجازت دی جاتی ہے اور اس مدت میں توسیع بھی ممکن ہے۔

اجازت ملنے کے بعد نوازشریف 19 نومبر کو شہبازشریف اور ڈاکٹر عدنان کے ہمراہ قطر ایئرویز کی ایئرایمبولینس کے ذریعے لندن پہنچے تھے۔ نوازشریف کو لندن پہنچنے کے اگلے روز اسپتال لے جایا گیا جہاں علاج سے پہلے ان کے متعدد ٹیسٹ کیے گئے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here