قافیے ملانا الگ چیز ہے اور صحیح اور غلط کی پہنچان الگ شے ۔۔ 

حبیب جالب ایوب خان کا مخالف رہا۔ اسکی شاعری ایوب خان کے خلاف تحریک چلانے میں بہت کام آئی۔ 

بالآخر ایوب خان کا دھڑن تختہ ہوگیا اور بھٹو کے اقتدار کی راہ ہموار ہوئی۔ 

بھٹو کے کرتوتوں نے جب اسکو پھانسی پر لٹکایا تو شاعر موصوف نے بھٹو کے مرثیے لکھے۔
Image may contain: 2 people

 

“ٹوٹا ہے کہاں اس کا جادو
اک نعرہ بنا ہے اس کا لہو

ثابت ہوا دھڑکن دھڑکن پر وہ شخص حکومت کرتا تھا

لڑتا تھا وہ اپنے جیسوں سے ہم سے تو محبت کرتا تھا” ‎

کیا واقعی ؟؟؟؟؟

جنرل ضیاء کا بدترین مخالف رہا اور اس کے مقابلے میں بے نظیر سپورٹ کرتا رہا۔

“ظلمت کو ضیا، صر صر کو صبا، بندے کو خدا کیا لکھنا”

بھٹو کو ایوب پر اور بے نظیر کو ضیاء پر ترجیح ۔۔۔۔۔۔ 

یہ تھی اس شاعر موصوف کی کل بصیرت۔ میری رائے میں اگر کسی شاعر کی شاعری نے پاکستان کو سب سے زیادہ نقصان پہچایا ہے تو وہ حبیب جالب ہیں۔

مجھے اس میں اور پیپلز پارٹی کے کسی احمق جیالے میں کبھی کوئی فرق محسوس نہیں ہوا۔

کیا کوئی مجھے فلسفے جھاڑے بغیر آسان الفاظ میں سمجھا سکتا ہے کہ یہ شاعر کیوں عظیم تھا اور پاکستان کی کونسی خدمت سرنجام دی تھی؟؟

تحریر شاہدخان

 

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here