بیس کروڑ عوام اگر مل کر بھی سات سال کی کمسن بچی زینب اور دیگر تمام معصوم بچوں کو انصاف نہیں دلا سکتے تو

0
543

بیس کروڑ عوام اگر مل کر بھی سات سال کی کمسن بچی زینب اور دیگر تمام معصوم بچوں کو انصاف نہیں دلا سکتے تو پھر اللہ خود انصاف کرے گا

اور اس انصاف کی پکڑ میں پوری قوم آئے گی یہ بات یاد رکھیے گا. ہم زندہ لاشوں سے بھی بدتر ہو چکے ہیں

بیس لاکھ روپے کا ایک موٹر سائیکل ہے ڈولفن فورس والوں کے پاس اور ہماری بچیوں کی لاشیں ادھڑی ہوئی ٹانگوں سمیت کبھی کماد کےکھیتوں تو کبھی کچرے کےڈھیروں سے مل رہی ہیں

کیا فائدہ ان محکموں، ایوانوں اور ان کھوکھلے دعوؤں اور نعروں کا ہمیں ؟؟؟

رانا ثنا اللہ کی بکواس کے مطابق جنسی زیادتی کا شکار ہونے والے بچوں کے والدین کا قصور ہے جو بچوں کو اکیلا چھوڑتے ہیں یا پھر بچوں کا قصور ہے جو شکار بن جاتے ہیں.

پھر پارلیمنٹ میں بیٹھے جنگلی سؤروں کا کیا کام ہے اگر عوام کو تحفظ نہیں مل سکتا تو؟؟؟

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here