“انصاف کے عمل کو شفاف بنانے کے لیے آئین میں تبدیلی ضروری ہے” ۔۔۔ مسلم لیگ ن

0
1177

پٹواری لاجک ۔۔۔۔۔۔۔۔ !

“انصاف کے عمل کو شفاف بنانے کے لیے آئین میں تبدیلی ضروری ہے” ۔۔۔ مسلم لیگ ن 

کیسی تبدیلی؟

الف ۔۔۔۔ “اراکین قومی صوبائی اسمبلی جرم کریں تو پکڑنے کے لیے وزیراعظم یا وزیراعلی کی اجازت لازم”

اگر اجازت نہ ملے تو؟

“عیاشی کرے”

اگر مجرم کے پاس قومی و صوبائی اسمبلی کی رکنیت نہ ہو تو؟

” لتر کھائے یا پھر الیکشن لڑے”

ب ۔۔۔ ” کسی بھی جرم میں ناہلی کی مدت 6 ماہ ہوگی”

6 ماہ بعد مذکورہ نااہل میں کہاں سے اہلیت آجائیگی؟

” تازہ دم ہوجائیگا”

ج ۔۔۔ آئین کے آرٹیکل 62/63 کا مکمل خاتمہ

اس آرٹیکل میں کیا مسئلہ ہے ؟

” جھوٹے اور بے ایمان کو نااہل قرار دیتا ہے”

تو اس سے آپ کو کیا خطرہ؟؟

” نااہلی کا ”

تو یہ سب کرنے سے انصاف کا عمل کیسے شفاف ہوگا؟؟

اسکا جواب ندارد۔ اگر کوئی پٹواری عنایت کردے تو عین نوازش ہوگی!

تحریر شاہدخان

نوٹ ۔۔۔۔۔ ن لیگ کا دعوی ہےکہ اس قانون سازی کا فائدہ 22 کروڑ عوام کو ہوگا 

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here